کوئٹہ کہاں ہے ؟

میں کافی دنوں سے کرسٹینا کو پاکستان کے مختلف حصوں کے بارے میں بتا رہا تھا . وہ مجھ سے ہر صوبے ، ہر شہر اور ہر علاقے کے بارے میں سوالات کرتی اور میں اسے اپنے علم کے مطابق معلومات فراہم کرتا . ایک روز میں نے اس کی معلومات کا امتحان لیا اور پوچھا کہ مینار پاکستان کہاں ہے ، اس نے جواب دیا ” اسلام آباد کے پاس ” میں نے اس سے پوچھا کہ سالٹ رینج کہاں ہے ، وہ بولی ” گلگت کے پاس ” میں اس کے جوابات پر ہنس دیا

کرسٹینا نے پوچھا ” کیا میرے جوابات درست نہیں ہیں ” میں نے ہنستے ہوئے اسے بتایا کہ اس کے جوابات نہ صرف غلط ہیں بلکہ ان میں سینکڑوں میلوں کا فرق بھی ہے . کر سٹینا نے مجھ سے پوچھا کہ وہ جگہوں کا نام کیسے یاد رکھ سکتی ہے . میں نے اسے مشورہ دیا کہ وہ جگہوں کے ساتھ ۔حوالے جوڑ لے اور جب ان مقامات کا سوچے تو ان حوالوں کو بھی ذہن میں لائے اور جگہوں کی محل وقوع اسے خود بخود یاد آ جائے گا 

آج صبح میں ناشتہ کر رہا تھا ، مجھے کرسٹینا کا فون آیا اور بولی مجھے پتہ ہے بلوچستان کا صوبائی دارالحکومت کوئٹہ ہے اور خیبر پختونخواہ کا صوبائی دارالحکومت پشاور ہے . میں نے کرسٹینا سے پوچھا کہ اسے یہ اتنی جلدی کیسے یاد ہو گیا . وہ بولی مجھے کوئٹہ اور پشاور سے منسوب ایک حوالہ مل گیا ہے ، وہ بولی ” کوئٹہ وہی شہر ہے جس میں کل 70 لوگ مارے گئے اور پشاور میں 132 بچوں کو سکول میں درندگی کا نشانہ بنایا گیا تھا 

Anwaar Ayub Raja is a linguist and broadcaster based in United Kingdom. He could be reached at awaar@anwaarraja.com

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *