سابق وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف کو دوبارکینسر کا خطرہ ، اسپتال میں طبی معائنہ



News Desk

سابق وزیر اعلیٰ پنجاب  اور قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کو سی ٹی سکین کےلئے اسلام آباد کے نجی ہسپتال منتقل کر دیا گیاجہاں اپوزیشن لیڈرکا مکمل میڈیکل چیک اپ کیا گیا،ڈاکٹرز نے شہباز کے خون کے نمونے لئے اور سی ٹی سکین بھی کیا۔ذرائع کے مطابق ڈاکٹروں کے میڈیکل بورڈ نے سی ٹی سکین اور کچھ بلڈ ٹیسٹ کےلئے کہا تھا،نیب کی تحویل میں ہی انہیں ان ٹیسٹوں کےلئے اسلام آباد کے نجی ہسپتال منتقل کیاگیا۔

ذرائع کا بتانا ہے کہ ضرورت پڑنے پر صدر ن لیگ شہبازشریف کے مزید ٹیسٹ بھی کیے جائیں گے۔اپوزیشن لیڈر قومی اسمبلی شہبازشریف طبی معائنے کے بعدنجی ہسپتال سے منسٹرانکلیوپہنچ گئے،شہباز شریف کوکل لاہور لےجایاجائےگا۔میڈیکل رپورٹ آنے کے بعد طبی ماہرین مستقبل کے لئے حکمت عملی تجویز کریں گے۔شہباز شریف کو قومی احتساب بیورو (نیب) کی تحویل میں اسلام آباد کے نجی اسپتال منتقل کیا گیا۔ جہاں اُن کا طبی معائنہ ہوا اور مزید ٹیسٹ لیے گئے۔

جس کے بعد اُنہیں اسپتال سے روانہ کر دیا گیا۔شہباز شریف کو نیب کی تحویل میں اسپتال لایا گیا تھا جہاں اُن کے خون کے نمونے لیے گئے اور سی ٹی اسکین کیا گیا۔ شہباز شریف رپورٹ آنے تک اسلام آباد میں ہی قیام کریں گے جہاں منسٹر انکلیو کو سب جیل قرار دیا گیا ہے جب کہ رپورٹ آنے کے بعد میڈیکل بورڈ اپنی سفارشات مرتب کرے گا۔شہباز شریف نے گزشتہ ماہ نیب عدالت کو اپنے کیسنر کا مریض ہونے سے متعلق آگاہ کیا تھا اور طبی معائنے کی درخواست کی تھی۔ جس کے ڈاکٹر آصف عرفان کی سربراہی میں چار رکنی میڈیکل بورڈ تشکیل دیا گیا تھا۔شہبازشریف کا گزشتہ ہفتے 22 نومبر کو احتساب عدالت میں کہنا تھا کہ کینسر سے صحت یاب ہونے کے باوجود انہیں طبی علاج فراہم نہیں کیا جا رہا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *