انٹر بینک میں ڈالر کی قیمت میں نمایاں کمی ، روپے کی قدر میں اضافہ

News Desk

فاریکس ڈیلرز کے مطابق کاروبار کے آغاز پر انٹر بینک میں ڈالر کی قیمت 139.05 سے کم ہو کر 136 روپے پر آگئی ہے۔گزشتہ ہفتے کے اختتام پر ڈالر کی قیمت ہوشربا اضافے کے ساتھ تاریخ کی بلند ترین سطح 142 روپے تک پہنچ گئی تھی جس سے ملکی قرضوں میں بھی خاطر خواہ اضافہ ہوا۔

گزشتہ جمعہ ڈالر کی قیمت بلند ترین سطح کو چھو کر دوبارہ  138.50 روپے پر آگئی۔حکومت پر قرضوں کی ادائیگیوں  کا بوجھ  اور خزانے میں پیسے نہ ہونے کی وجہ سے  حکومت کے پاس زر مبادلہ کے وہی ذخائر ہیں جو امداد کی مد میں سعودی عرب سے ملے تھے روپے کی قدر جلد بہتر ہونے کا کوئی امکان نظر نہیں آتا۔ انہوں نے مشورہ دیا تھا کہ ڈالر کی قیمت کم کرنے کیلیے  درآمدات میں کمی لانی ہوگی، لگژری آئٹم پر پابندی لگانی ہوگی تاکہ درآمدات اور برآمدات میں بیلنس برقرار رکھا جائے۔

مگر ملک میں بڑھتی ہوئی مہنگائی اور بیروزگاری کی وجہ سے حکومت ابھی تک پوری طرح ڈالر کی اڑان پر قابو پانے میں ناکام ہے ۔فاریکس ڈیلرز کے مطابق کاروبار کے آغاز پر انٹر بینک میں ڈالر کی قیمت 139.05 سے کم ہو کر 136 روپے پر آگئی ہے۔

ڈالر کی قیمت میں اضافے کے حوالے سے اوزیر اعظم عمران خان نے قوم کو تسلی دیتے ہوئے بتایا کہ اس میں کوئی گھبرانے کی بات نہیں ہے، جب خسارہ بڑھ جاتا ہے تو تھوڑا مشکل وقت آتا ہے لیکن حکومت ایسے اقدام کر رہی ہے جس سے مستقبل میں ملک کو ڈالرز کی کمی نہیں ہو گی اور چیزیں بہترسے بہتر ہوتی جائیں گی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *