اپوزیشن لیڈر میاں شہباز شریف کی طبیعت ناساز ،کمرہ ہائی سکیورٹی زون قرار

News Desk

کوٹ لکھپت جیل میں قید اپوزیشن لیڈر قومی اسمبلی شہباز شریف کے کمرے کو ہائی سیکیورٹی زون قرار دے دیا گیا ہے۔ شہباز شریف کے کمرے کی سیکیورٹی پر اسسٹنٹ سپرنٹنڈنٹ اور 3 اہلکاروں کو شہباز شریف پر تعینات کیا گیا ہے جن کو 8 گھنٹے بعد تبدیل کرکے دوسری شفٹ کے اہلکاروں کو تعینات کیا جاتا ہے۔سیکیورٹی پر مامور اہلکاروں کی مکمل چیکنگ کی جاتی ہے۔سیکیورٹی پر مامور پولیس اہلکار صرف کمرے میں موجود شہباز شریف کو دیکھ سکتے ہیں۔

انہیں کوئی چیز فراہم نہیں کرسکتے ۔ شہباز شریف سے ملاقات کے لئے جمعرات کا دن مقررکیا گیا ہے۔  میڈیا رپورٹ کے مطابق جیل ذرائع نے بتایا کہ جیل میں پہلے دن شہباز شریف سے ملاقات کے لیے کوئی نہیں آیا۔شہباز شریف کو جیل کی طرف سے دیئے جانے والے ناشتے میں چائے اور سلائس فراہم کیے گئے۔
لیکن شہباز شریف نے صرف چائے ہی پی اور اپنے کمرے میں کتابوں کا مطالعہ کیا۔ دوپہر کے وقت انہوں نے سفید چنے کے سالن سے آدھی چپاتی کھائی جبکہ رات کے وقت انہوں نے چکن کے ساتھ چپاتی کھائی۔ یہی نہیں شہباز شریف نے صبح اور شام کے وقت اپنے کمرے کے ساتھ صحن میں چہل قدمی کی۔ جیل میں شہباز شریف نے شلوار قمیض اور جیکٹ پہن رکھی تھی۔

جیل کی طرف سے شہباز شریف کو ایک پلیٹ، ایک گلاس اور چمچ فراہم کیا گیا ۔مسلم لیگ ن کے صدر اور اپوزیشن لیڈر قومی اسمبلی شہباز شریف نے جیل حکام کو بتایا تھا کہ وہ پرہیزی کھانا کھاتے ہیں لہٰذا انہیں گھر سے کھانا منگوانے کی اجازت دی جائے جس پر جیل حکام نے انہیں گھر سے کھانا منگوانے کی اجازت دے دی۔ آج شہباز شریف کے گھر سے کھانا جیل بھجوایا جائے گا جہاں جیل حکام کی چیکنگ کے بعد انہیں کھانا فراہم کیا جائے گا۔

دوسری جانب کوٹ لکھپت جیل میں جناح ہسپتال کے خصوصی میڈیکل بورڈ نے شہباز شریف کا طبی معائینہ کیا۔ ڈاکٹرز نے شہباز شریف کا بلڈ پریشر اور شوگر سمیت خون کے مختلف ٹیسٹ لئے جس کے بعد شہباز شریف کے تمام رپورٹس نارمل قرار دی گئی۔
گزشتہ روز ڈاکٹروں نے طبیعت ناسازی کے باعث شہباز شریف کو آرام ہوا دار کمرے اور بروقت ادویات کھانے کی ہدایت دے رکھی تھی، جنرل سرجن پروفیسر طیب عباس 4 رکنی ٹیم کے سربراہ تھے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *