مودی حکومت سے مذکرات کی منت کرنا پاکستان کے مفاد میں نہیں ہے۔چوہدری نثار علی خان

News Desk

سابق وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی نے راولپنڈی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہمیں نریندر مودی حکومت سے یک طرفہ مذاکرات نہیں کرنے چاہیں۔ تالی دونوں ہاتھوں سے بجتی ہے اور مودی حکومت پاکستان سے دوستی نہیں چاہتی اور مودی حکومت سے مذکرات کی منت کرنا پاکستان کے مفاد میں نہیں ہے۔عام انتخابات کے دوران صوبائی نشستوں پر تو میں کامیاب ہو گیا لیکن قومی اسمبلی کی نشستوں پر مجھے ہرا دیا گیا۔ گاؤں دیہاتوں میں صوبائی اور قومی اسمبلی کی نشستوں پر ایک جیسا ووٹ ہی کاسٹ ہوتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ بیرون ملک سے ہم قرضے لے کر کچھ عرصہ تو گزار لیں گے لیکن اس طرح معیشت مضبوط نہیں ہوگی۔ پہلے تو ہم غیروں کے قرضوں میں جکڑے ہوئے تھے لیکن اب دوستوں کے قرضوں کے بوجھ تلے چلے جائیں گے۔ اس لیے چادر دیکھ کر ہی پاؤں پھیلانے چاہیں۔انہوں نے مزید کہا کہ ملک کے حالات دیکھ کر کچھ نہ بولنا ہی بہتر ہے، ملک میں اس وقت شدید سیاسی بحران ہے، کوئی ملک سیاسی استحکام کے بغیر ترقی نہیں کرسکتا۔

انہوں نے کہا ملک اپوزیشن کے بغیر نہیں چل سکتا، حکومت اپوزیشن کے تحفظات دور کرے، جمہوری نظام میں جمہوریت انتہائی اہم ہوتی ہے۔ کرتار پور راہداری کھولنے میں حکومت کا کوئی کردار نہیں یہ سب آرمی چیف کے کہنے پر ہوا ، یو اے ای اور سعودی عرب سے امداد وقتی ہے، عمران خان نے سفیروں سے خود انحصاری کی بات کی وہ تو نظر نہیں آ رہی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *