رواں ماہ مہمند ڈیم کی تعمیر کا کام شروع ہو جائے گا، واپڈا

News Desk

         پاکستان کے صوبہ خیبر پختونخواہ میں واقع مہمند ڈیم کی تعمیر کا کام جنوری کے پہلے ہفتے میں شروع ہو جائے گا ۔منصوبہ سے 800 میگاواٹ بجلی کے علاوہ پشاور شہر کو پینے کا صاف پانی کی فراہمی، 18 ہزار ایکڑ بنجر زمین کو سیراب اور مردان، چارسدہ اور پشاور کو سیلاب سے محفوظ بنانے میں مدد ملے گی، منصوبہ کی تعمیر پر پی ایس ڈی پی سے سالانہ 17 سے 18 ارب روپے خرچ کئے جائیں گے۔

مقامی بینکوں سے بھی مدد لی جائے گی، یہ منصوبہ آئندہ پانچ سالوں میں مکمل کر لیا جائے گا۔54 سال سے التوا کے شکار مہمند ڈیم کا تنازع حل کر دیا ہے جس میں آرمی چیف اور چیف جسٹس آف پاکستان کا اہم کردار ہے.واپڈا کے مطابق کنٹریکٹ ایوارڈ سے پہلے جوائنٹ وینچر کے ساتھ تکنیکی مذاکرات جاری ہیں، کام کے آغاز کا مقصد مئی تک پانی کے کم بہاؤ سے فائدہ اٹھانا ہے۔

خیال رہے کہ مہمند ڈیم کی تعمیر 49 سال پہلے منظور کی گئی تھی لیکن اس پر کام شروع نہ ہو سکا۔اس ڈیم کو شروع کرانے میں سب سے اہم کام علاقہ کے لوگوں نے کیا ہے، پاکستان میں پن بجلی کے منصوبوں سے 30 سے 40 ہزار میگاواٹ بجلی بنانے کی صلاحیت موجود ہے، ان ڈیموں کی تعمیر کے آغاز سے مقامی لوگوں کو تربیت فراہم کی جا سکے گی، مہمند ڈیم پر چار، پانچ ماہ میں پانی کے زیادہ بہاؤ سے پہلے پہلے زیادہ سے زیادہ کام نمٹانا چاہتے ہیں۔

مہمند ڈیم کو منڈا ڈیم بھی کہا جاتاہے۔ یہ دریائے سوات پر 5 کلو میٹر اپ سٹریم منڈا ہیڈ ورکس سے پہلے مہمند ضلع میں تعمیر کیا جائے گا۔ اس ڈیم کا بنیادی مقصد سیلاب سے بچاؤ، زرعی مقاصد کے لئے پانی اور بجلی کا حصول ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *