ابو ظہبی کے ولی عہد شیخ محمد بن زیدالنہیان پاکستان کا دورہ مکمل کر وطن واپس روانہ

News Desk

متحدہ عرب امارات کے ولی عہدشیخ محمد بن زیدالنہیان  12 سال بعد پاکستان کے دورے پر آئے۔ متحدہ عرب امارات کی مسلح افواج کے ڈپٹی سپریم کمانڈر اور ابوظبی کے ولی عہد محمد بن زید النہیان ایک روزہ دورے پر آج صبح اسلام آباد پہنچے جہاں ان کا پُر تپاک استقبال کیا گیا۔پاکستان پہنچنے پر وزیراعظم عمران خان نے نور خان ائیربیس پر استقبال کیا۔

اس موقع پر انہیں 21 توپوں کی سلامی بھی دی گئی۔معزز مہمان کو وزیراعظم ہاوس پہنچنے پرمسلح افواج کے چاق و چوبند دستے نے گارڈ آف آنرپیش کیا گیا اورپاکستان ائیرفورس کے جے ایف 17 طیاروں نے سلامی دی۔ولی عہد کی وزیراعظم عمران خان کے ساتھ ون آن ون ملاقات ہوئی جس میں دو طرفہ تعلقات اور باہمی دلچسپی کے امورپر تبادلہ خیال کیا گیا۔

متحدہ عرب امارات کی جانب سے پاکستان کوتین ارب ڈالرز کی امداد اور سرمایہ کاری کے حوالے سے امور بھی زیر غور آئے۔وزیر اعظم عمران خان معزز مہمان محمد بن زید کو گاڑی میں بیٹھا کر اسے خود چلاتے ہوئے وزیر اعظم ہاوس لے کر پہنچے۔خیال رہے کہ تین ماہ سے کم عرصے میں پاکستان اور متحدہ عرب امارات کی قیادت کے درمیان یہ تیسری ملاقات ہے جو دونوں ملکوں کے درمیان برادرانہ تعلقات کی خصوصی نوعیت کامظہرہے۔

یواے ای کے ولی عہد شیخ محمد بن زید النہیان نے اس سے قبل دوہزار سات میں پاکستان کا دورہ کیا تھا۔ چھبیس اکتوبر 2018 کو متحدہ عرب امارات کے وزیر مملکت سلطان احمد الجابر بھی پاکستان آئے۔29 اکتوبر 2018 کو متحدہ عرب امارات کے بری فورسز کے کمانڈر میجر جنرل صالح محمد صالح نے پاکستان کا دورہ کیا تھا۔وفود کی سطح پر مذاکرات میں  پاکستانی وفد کی نمائندگی وزیراعظم عمران خان نے کی اور یو اے ای کے وفد کی قیادت شیخ محمدبن زیدالنہیان نے کی۔ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی، وزیر اطلاعات فواد چودھری اور کابینہ کے دیگر اراکین نے بھی مذاکرات میں شریک ہوئے۔  مذاکرات میں مختلف شعبوں میں تعاون بڑھانے اور معاہدوں پر بات چیت کی گئی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *