ریلوے میں کرپشن کے کیس نیب کو بھیجے جائیں،وزیر اعظم

نیوز ڈیسک

پاکستان ریلوے لائیو ٹریکنگ سسٹم اور تھل ایکسپریس کی افتتاحی تقریب سے خطاب کے دوران وزیر اعظم عمران خانکا کہنا تھا کہ ٹرین عام آدمی کی سواری ہے، حکومت کی جانب سے عام آدمی کےلیے سفری سہولت پر توجہ دی گئی ہے۔ ٹرین کے سفرکومزید بہتربنایا جائے گا، دنیا کا سب سے بہترین ریلوے چین کا ہے، ایم ایل ون سے کراچی کا سفر8 گھنٹے میں طے ہو گا۔

اس موقع پر وزیر اعظم نے شیخ رشید کو ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ ریلوے میں چوری اورکرپشن کے کیسز نیب کو بھیجیں، انکا کہنا تھا کہ پچھلے دس سالوں میں کسی کوپکڑے جانے کا کوئی خوف نہیں تھا، پچھلے دس سال کے قرضے لوگوں کی جیبیوں میں گئے یہی وجہ ہے کہ آج ہم مشکل صورتحال سے گزر رہے ہیں، قرضوں کا ایک دن6ارب سود ادا کرتے ہیں۔

وزیراعظم نے اپوزیشن پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ آپ لوگ ایسے حالات پیدا نہ کرتے تو فری حج کروا دیتے، اپوزیشن والے کس منہ سے ایسی باتیں کرتے ہیں، ہم اپنے اخراجات کو کم کر رہے ہیں، شیخ رشید نے بھی ریلوے میں اخراجات کم کیے، مزید کریں گے۔ان کا کہنا تھا کہ کرپشن کے باعث پاکستان کا قرضہ30ہزارارب ہوگیا،روزانہ قرضوں پر6 ارب روپےسود دے رہے ہیں، ریلوے میں مزید خرچے کم کرنے ہوں گے۔

عمران خان نے کہا کہ وزیراعظم ہاوس کے30 فیصد اخراجات کم کردیئے،تمام وزارتیں کم ازکم 10فیصداخراجات کم کریں،گیس پر157ارب روپے کے قرضے ہیں،گیس کی قیمت نہ بڑھائیں توکمپنیاں بند ہوجائیں گی،ملک کا مستقبل روشن ہے۔وزیراعظم نے مزید کہا کہ پہلے کھانے اورنہاریاں چلتی تھیں، آج چائے اور بسکٹ پیش کیے جاتے ہیں، پچاس ارب کی سالانہ گیس چوری ہوتی ہے، اگر گیس کی قیمت نہ بڑھاتے تو گیس کی کمپنیاں بند ہو جاتی، باتیں کرنے والوں کو شرم آنی چاہیے۔ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ مشکل وقت ضرور ہے لیکن پاکستان کا مستقبل روشن ہے، ریلوے کی بھرپورمدد کریں گے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *